چمن طیبہ میں سنبل جو سنوارے گیسو

چمن طیبہ میں سنبل جو سنوارے گیسو چمن طیبہ میں سنبل جو سنوارے گیسو حور بڑھ کر شکن ناز پہ وارے گیسو کی جو بالوں سے ترے روضہ کی جاروب کشی شب کے شبنم نے تبرک کو ہیں دھارے گیسو ہم سیہ کاروں پہ یارب تپش محشر میں سایہ افگن ہوں ترے پیار کے پیارے …

چمن طیبہ میں سنبل جو سنوارے گیسو Read More »