کر دو کرم یا غوثاعظم

کر دو کرم یا غوثاعظم

جھولی کو   میری  ورنہ  کہے  گی  دنیا
ایسے سخی کا منگتا پھرتا ہے مارا مارا

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

 

غوث اعظم دستگیر،   سن لو  ائے  پیرانِ پیر
بدلو میری بھی تقدیر، عرض کرتا ہے یہ فقیر

 

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کھلا  میرے   دل  کی  کلی  غوث اعظم
مٹا   قلب   کی    بے   کلی   غوث اعظم

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

 

غوث اعظم دستگیر،   سن لو  ائے  پیرانِ پیر
بدلو میری بھی تقدیر، عرض کرتا ہے یہ فقیر

 

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

 

مِرے چاند  میں صدقے  آجا  ادھر  بھی
چمک   اٹّھے   دل  کی  گلی  غوث اعظم

 

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

 

غوث اعظم دستگیر،   سن لو  ائے  پیرانِ پیر
بدلو میری بھی تقدیر، عرض کرتا ہے یہ فقیر

 

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

 

تِرے  رب  نے  مالک  کیا  تیرے   جد   کو
تِرے  گھر   سے   دنیا   پلی   غوث اعظم

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

 

غوث اعظم دستگیر،   سن لو  ائے  پیرانِ پیر
بدلو میری بھی تقدیر، عرض کرتا ہے یہ فقیر

 

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

 

کہا  جس  نے  یا غوث  اغثنی  تو دم  میں
ہر آئی      مصیبت      ٹلی     غوث اعظم

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

 

غوث اعظم دستگیر،   سن لو  ائے  پیرانِ پیر
بدلو میری بھی تقدیر، عرض کرتا ہے یہ فقیر

 

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

 

نہیں   کوئی    بھی    ایسا    فریادی    آقا
خبر  جسکی  تم   نے   نہ  لی   غوث اعظم

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

 

غوث اعظم دستگیر،   سن لو  ائے  پیرانِ پیر
بدلو میری بھی تقدیر، عرض کرتا ہے یہ فقیر

 

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

 

نہ مانگوں میں تم سے تو پھر کسے مانگوں
کہیں   اور   بھی    ہے    چلی    غوث اعظم

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

 

غوث اعظم دستگیر،   سن لو  ائے  پیرانِ پیر
بدلو میری بھی تقدیر، عرض کرتا ہے یہ فقیر

 

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

 

جو  قسمت  ہو  میری  بری  اچھی  کر دے
جو   عادت  ہو  بد   کر   بھلی  غوث اعظم

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

 

غوث اعظم دستگیر،   سن لو  ائے  پیرانِ پیر
بدلو میری بھی تقدیر، عرض کرتا ہے یہ فقیر

 

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

 

تِرا  رتبا   اعلی   نہ   کیوں   ہو   کہ   مولا
تو ہے         ابنِ مولا علی        غوث اعظم

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

 

غوث اعظم دستگیر،   سن لو  ائے  پیرانِ پیر
بدلو میری بھی تقدیر، عرض کرتا ہے یہ فقیر

 

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

 

قدم    گردن     اولیاء     پر     ہے     تیرا
تو ہے   ربّ  کا   ایسا   ولی   غوث اعظم

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

 

غوث اعظم دستگیر،   سن لو  ائے  پیرانِ پیر
بدلو میری بھی تقدیر، عرض کرتا ہے یہ فقیر

 

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

 

تباہی    سے       ناؤ      ہماری     بچادو
ہوائے    مخالف     چلی     غوث  اعظم

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

 

غوث اعظم دستگیر،   سن لو  ائے  پیرانِ پیر
بدلو میری بھی تقدیر، عرض کرتا ہے یہ فقیر

 

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

 

فدا  تم   پہ  ہو  جائے   نوری   یہ  مضطر
یہ ہے اس کی  خواہش  دلی  غوث اعظم

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

 

غوث اعظم دستگیر،   سن لو  ائے  پیرانِ پیر
بدلو میری بھی تقدیر، عرض کرتا ہے یہ فقیر

 

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

 

کر دو کرم یا غوث اعظم رضی اللہ تعالی عنہ

Leave a Comment