سرکارِ اعلیٰ حضرت کو مجددِ اعظم کیوں کہتے ہیں

سرکارِ اعلیٰ حضرت کو مجددِ اعظم کیوں کہتے ہیں…؟؟؟
قسط:7️⃣ 28/9/2021

📚📖🖊️📃📘📕📗📙

✒ 1 پہلی صدی سے 14 صدی تک یعنی ہمارے آقائے کائنات صلی اللہ علیہ وسلم کے ہجرت فرمانے کے بعد جب سو سال پورے ہوئے، اب یہی ہجری سال کو جب سو سال پورے ہوئے تو…

حدیث مصطفے صلی اللہ علیہ وسلم …
اِنَّ اللّٰه يَبعَث لِھذہ الامة علٰی راس کل مائة سنة من يجدد لها دينها

اس حدیث کے ترجمہ و مفہوم کے مطابق ہر صدی کے آخری میں امت میں سے اللہ ایسے مردِ مومن کو بھیجےگا جو میرے دین کو نکھارے گا

اس لحاظ سے سو ہجری پوری ہوئی تو نبی محترم سیدِ اعلیٰ
صلى الله عليه وسلم کی اُمْت میں پہلے مجدد حضرت عمر بن عبدالعزیز رضی اللہ عنہ ظاہر ہوئے.

کُل حاصل یہ کے 1 پہلے صدی سے آج 14 صدی تک 28 مجدد تشریف لائے اور سرکار اعلیٰ حضرت رضي الله عنه 28ویں نمبر پر مجدد ہیں.

✒ سرکار اعلیٰ حضرت رضی اللہ تعالیٰ عنہ کو مجددِ اعظم کہنے کی ایک خاص وجہہ یہ بھی ھیکہ آپ نے اپنی زندگی میں 1000 نہیں اُس سے زائد کتابیں بلکہ علماء فرماتے ہیں 1400 سے زائد ہیں کیونکہ کئی 100 کتابیں تو اب بھی صندوق میں بند ہے.
آپ چودھویں صدی کے مجدد ہیں. ایک صدی میں سو سال ہوتے ہیں، جب کہ آپ کی عمر شریف بھی 100 سال کی نہ ہوئی اور اگر سو سال بھی ہوتی اور ہر سال میں ایک کتاب لکھتے تو سو کتابیں لکھی جاتی مگر آپ نے سو سے زائد کتابیں بلکہ 1400 سے زائد کتابیں لکھ ڈالی یعنی کے پوری چودھویں صدی اگلی پچھلی ملا کر اگر جوڑا جائے تو آپ نے 1400 سال تک کی ایک ایک کتابیں لکھ ڈالی سارے علوم اللہ نے آپ پر ظاہر فرمادیا…..
سبحان اللہ سبحان اللہ…!!

آپ نے فرمایا کے میرا عقیدہ میری کتابوں سے ظاہر ہے. اس کے علاوہ سرکارِ اعلیٰ حضرت رضی اللہ تعالیٰ عنہ نے اپنے وسایا شریف میں خود فرمایا کہ…..
“میرے بعد اللہ تعالی ضرور اپنے دین کی خدمت کے لئے کسی بندے کو کھڑا کر دیگا مگر معلوم نہیں میرے بعد جو آۓ کیسے ہو اور تمھیں کیا بتاۓ اسلئے ان باتوں کو خوب سن لو حُجَّةُ اللّٰہ قائم یو چکی ہے۔ اب میں قبر سے اٹھکر تمھارے پاس بتانے نہ آؤنگا، جس نے اسے سنا اور مانا قیامت کے دن اس کے لئے نور اور نجات ہے۔ اور جس نے نا مانا اس کے لئے ظلمت و ہلاکت ہے۔”

✒️ اور ایک ضروری بات آپکو بتاتی چلوں کہ.. مجدد پر جو حدیث شریف ہے..
اِنَّ اللّٰه يَبعَث لِھذہ الامة علٰی راس کل مائة سنة من يجدد لها دينها

ا ب ت ث ج د ذ ر س ع ك ل م ن ه ي

✒ مجدد کے لئے اس حدیثِ مبارکہ میں جتنے بھی حُروف آئے ہیں. وہ سب حروف پہلی صدی سے لیکر چودہ صدی تک جتنے بھی مجددِ کرام دنیا میں تشریف لائے اُنکے ناموں میں بھی آتے ہیں..
✒ سرکا اعلیٰ حضرت تک کُل ملاکر 28 مجدد تشریف لائے ہیں. اور ہر مجدد نے اپنے دور میں کسی نہ کسی فرقے کی رد فرمائی. پہلی صدی کے مجدد 🌟حضرت عمر بن عبدالعزیز رضی الله عنه نے اپنے دور میں 3 فرقوں کا رد فرمایا..
(1) رافضی (2) خارجی
(3)منافقین.

دوسری صدی میں 4 فرقوں کا رد تیسری میں 5. اسی طرح جب 14 صدی کے ..
🌟مجددِ اعظم امام احمد رضا اعلیٰ حضرت تشریف لائے تو آپ نے 72 کے 72 فرقوں کا رد بھی فرمایا اور انکا عقیدہ بھی بتا دیا. اور ان سے سنیوں کو بچنے کی بھی وصیت فرما گئے…

سلام اس پر کے جس نے رد کیا باطل عقائد کو
سلام اس پر کے کچلا جس نے حشو زواید کو
سبحان الله..!

یہی وجہ ہے کہ آپ مجدد اعظم کہلائے….
🚩ائے بریلی تیری دنیا بھر میں جو پہچان ہے
اعلیٰ حضرت مفتی اعظم کا یہ احسان ہے
عشق و محبت عشق و محبت اعلیٰ حضرت اعلیٰ حضرت.

( ✒️اے. رضویہ ممبئی)
_مرکز : جامعہ نظامیہ صالحات کرلا _

Leave a Comment